میرے صوبے اور میرے ووٹر کے حق پر کوئی سمجھوتا نہیں ہوگا، لشکری رئیسانی

0 247

کوئٹہ (اسٹاف رپورٹر امروز نیوز )سابق سینیٹر نوابزادہ میر حاجی لشکری رئیسانی نے کہا ہے کہ ہمارا جدوجہد یرغمال ہے اس لیے پارلمنٹ کو سٹے سے آذاد کرنا ہے۔ تمام سیاسی جماعتیں سسٹے آلود ڈپٹی اسپیکرکی سربراہی میں کارروائیوں کا حصہ ہے جعلی ووٹ لینے والے کیخلاف جدوجہد کررہے ہیں سیاسی جماعتیں ہمارا ساتھ دیں۔ہمارا ووٹر کے حق کیلئے آخری حد تک جدوجہد کرینگے

۔ہمیں امید ہے کہ ہمارے ووٹر اور صوبے کو انصاف ملے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے حلقہ این اے 265 پر جعلی ووٹ کیس کی سماعت کے بعد اپنے وکیل ریاض احمد ایڈوکیٹ کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ریاض احمد ایڈوکیٹ نے کہا کہ معزز جج صاحبان سے درخواست کی قاسم سوری ٹربیونل سے کیس ہار گئے ہیں کیس کو الگ کیاجائے۔ معزز جج صاحبان نے میری درخواست قبول کرلی اور کیس کو الگ کردیااور کیس کو دوہفتوں کے اندر سنیں گے

۔ اس موقع پر نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی نے کہا کہ افسوس کے ساتھ کہنا پڑتاہے کہ ہمارا جدوجہد یرغمال ہے اس لیے پارلمنٹ کو سٹے سے آذاد کرنا ہے۔ تمام سیاسی جماعتیں سسٹے آلود ڈپٹی اسپیکرکی سربراہی میں کارروائیوں کا حصہ ہے۔اس شخص سے کیا توقع کو 65 ہزار جعلی ووٹ سے اسمبلی چلارہاہے۔نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی نے کہا کہ ہم ایک یرغمال پارلمنٹ کو آذاد کرنے کیلئے جدوجہد کررہے ہیں۔میرے صوبے اور میرے ووٹر کے حق پر کوئی سمجھوتا نہیں ہوگا۔

نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی نے کہا کہ جعلی ووٹ لینے والے کیخلاف جدوجہد کررہے ہیں سیاسی جماعتیں ہمارا ساتھ دیں۔ہمارا ووٹر کے حق کیلئے آخری حد تک جدوجہد کرینگے۔ہمیں امید ہے کہ ہمارے ووٹر اور صوبے کو انصاف ملے گا۔اگر سیاسی جماعتیں آواز اٹھاتے تو آج اس کیس کا فیصلہ ہوچکا ہوتا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.