حکومت میں شامل اتحادی جماعتوں کا ضمنی انتخابات میں حصہ نہ لینے کا متفقہ فیصلہ

0 35

اسلام آباد / پشاور: وزیراطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نے اعلان کیا ہے کہ حکومت میں شامل اتحادی جماعتوں کا ضمنی انتخابات میں حصہ نہ لینے کا متفقہ فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ فسادی جماعت (پی ٹی آئی) ضمنی الیکشن لڑے اور اسمبلی میں آ جائے، فسادی جماعت استعفوں کی منظوری اور کبھی استعفے منظور نہ کرنے کے لئے عدالتوں میں جاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر پی ٹی آئی کو الیکشن لڑنا اور ایوان میں ہی آنا تھا تو اسمبلیاں کیوں توڑیں اوراستعفے کیوں دئیے تھے؟

مریم اورنگزیب نے کہا کہ فسادی جماعت چکرا چکی ہے کہ کیا کرے، عدالت جائے، اسمبلی جائے، الیکشن میں جائے، ملک کو کسی ایک شخص کے انتشار کی بھینٹ نہیں چڑھنے دیں گے۔

دوسری جانب عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) نے خیبرپختونخوا کے قومی اسمبلی کے حلقوں پر ضمنی انتخابات کے بائیکاٹ کا اعلان کردیا، صوبائی صدر ایمل ولی خان نے کہا کہ ایک نام نہاد سیاسی جماعت نے انتخابی سیاست کو مذاق بنایا ہوا ہے، پہلے ایک امیدوار کو کئی نشستوں پر کھڑا کرکے قوم کے اربوں روپے ضائع کئےگئے۔

ایمل ولی نے کہا کہ ایک طبقہ سیاست میں عدم برداشت پیدا کرنے اور پارلیمنٹ کی بے توقیری کی کوششوں میں مصروف ہے، موجودہ معاشی حالات کو دیکھتے ہوئے تین مہینوں کیلئے قوم کے کروڑوں خرچ کرنا زیادتی ہوگی، اے این پی نے 18حلقوں کیلئے امیدواران کا اعلان کیا تھا، ہر وقت انتخابات کیلئے تیار ہیں۔

صوبائی صدر نے کہا کہ عام انتخابات کا اعلان کل بھی ہو تو اے این پی بھرپور قوت کے ساتھ میدان میں ہوگی، پی ڈی ایم اور پاکستان پیپلزپارٹی کی جانب سے بھی انتخابات میں حصہ نہ لینے کی درخواست کی گئی تھی، اتمام اتحادیوں کے انتخابات میں حصہ نہ لینے کے بعد اے این پی نے مشاورت سے فیصلہ کیا ہے۔

ایمل ولی کا کہنا تھا کہ مختصر وقت میں بھرپور انتخابی مہم چلانے پر کارکنان اور ذمہ داران کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.