گوادر دھرنے والوں سے مزکرات جاری ہیں، سردار کھیتران

0 70

کوئٹہ (امروز ویب ڈیسک)بلوچستان عوامی پارٹی کے ترجمان صوبائی وزیر مواصلات سردار عبدالرحمان کھیتران نے سابق وزیراعلءبلوچستان جام کمال خان کے ٹ¶یٹ پر ردعمل دیتے ہو? کہا ہے کہ سابق وزیراعلءنے اپنے ٹ¶یٹ میں جن دھرنوں کا زکر کیا ہے وہ دھرنے انکی اپنی حکومت کے دوران شروع ہو?جبکہ موجودہ صوباءحکومت کو بنے صرف ایک ماہ اور چند دن ہو? ہیں ترجمان نے کہا ہے کہ گوادر دھرنا اس سال جولاءسے جاری ہےعلاوہ ازیں سابق وزیراعلی نے خود اعتراف کیا ہے

کہ ڈاکٹر دو ماہ سے احتجاج پر ہیں ترجمان کا کہنا ہے کہ اخلاقی طور پر انہیں زیب نہیں دیتا کہ وہ اپنی حکومت کی کوتاہیوں کو موجودہ حکومت کے کھاتے میں ڈالیں ترجمان نے کہا کہ سابقہ دور بادشاہت میں ہمیشہ مظاہرین اور پولیس کو آمنے سامنے کیا گیاسابق وزیراعلءکے حکم پر ڈاکٹروں پر تشدد کیاگیا جسکی مثال ماضی میں نہیں ملتی ترجمان نے کہا ہے کہ درحقیقت جام کمال خان ابھی تک اپنی وزارت اعلءکھونے کو ہضم نہیں کر سکے ہیں ترجمان نے کہا ہے کہ ترقیاتی منصوبوں پر کام بند ہونے کے حوالے سے جام کمال خان کے بیان میں صداقت نہیں ہے وزیراعلءمیر عبدالقدوس بزنجو نے حکومت کی تبدیلی کے مراحل میں بند کی? گی? ترقیاتی فنڈز کے اجراءکی منظوری دے دی ہےترجمان نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت دوریوں پر نہیں نزدیکیوں پر اور توڑنے پر نہیں جوڑنے پر یقین رکھتی ہے گوادر دھرنے والوں سے مزکرات جاری ہیں

اور جلد بریک تھرو ملے گاجبکہ ڈاکٹروں کے ساتھ صوبائی وزیر صحت ایک اعلی اختیاراتی کمیٹی کے زریعہ مزاکرات کر رہے ہیں اور بہادر خان وویمن یونیورسٹی کی طالبات کا احتجاج گزشتہ روز باہمی گفت و شنید کے زریعہ ختم ہو چکا ہےترجمان نے کہا ہے وہ جام کمال خان کو مشورہ دیتے ہیں کہ وہ موجودہ تبدیلی کو زہنی طور پر قبول کر لیں اور انہیں زہن سے یہ بات نکال دینی چاہی? کہ ان کے بغیر صوبہ نہیں چل سکتاترجمان نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت نے مختصر مدت میں بہت سی کامیابیاں حاصل کی ہیں جنکی جام کمال خان کو توقع نہیں تھی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.