تشدد سے نو عمر بچے کے قتل کیس میں تفتیشی افسر کو چالان پیش کرنے کا حکم

0 103

 کراچی: جوڈیشل مجسٹریٹ شرقی نے بہادر آباد کے علاقے میں تشدد سے نو عمر بچے کی ہلاکت کے مقدمے میں تفتیشی افسر کو چالان پیش کرنے کا حکم دیدیا۔

کراچی سٹی کورٹ میں جوڈیشل مجسٹریٹ شرقی کی عدالت کے روبرو بہادر آباد کے علاقے میں تشدد سے نو عمر بچے کی ہلاکت کے مقدمے کی سماعت ہوئی۔ تفتیشی افسر مقدمے کا چالان پیش کرنے میں ناکام رہا۔

تفتیشی افسر نے چالان جمع کرنے کے لیئے مہلت مانگ لی۔تفتیشی افسر نے بتایا کہ مجھے مقدمہ ابھی ملا ہے۔ چالان جمع کرنے کی مہلت دی جائے۔ عدالت نے تفتیشی افسر کو 29 نومبر تک چالان پیش کرنے کا حکم دیدیا۔

پولیس کے مطابق بچے پر بیلن سے تشدد کیا گیا تھا۔ مقتول 6 ماہ قبل پنجاب سے کراچی آیا تھا۔ ملزمان کیخلاف بہادر آباد تھانے سرکاری مدعیت میں مقدمہ درج ہے۔ گرفتار ملزمان میں بلڈر فرحان، اس کی ماں و دیگر شامل ہیں۔ مقدمہ قتل کی دفعات کے تحت درج کیا گیا تھا۔

واضح رہے کہ 10 نومبر بچے کی تشدد زدہ لاش خاتون کی جانب سے اسپتال چھوڑ کر جانے کا واقعہ پیش آیا تھا۔

مقتول بچے آفتاب پر فرحان جاوید نامی مقامی بلڈر نے تشدد کیا۔ بچے کی لاش کو اسپتال چھوڑنے فرحان کی ماں آئی تھی۔

پولیس نے فرحان اور والدہ دونوں کو گرفتار کر لیا ہے، بچے کی لاش جس گاڑی میں لائی گئی وہ بھی برآمد کرلی گئی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.